محبت میں کوئی بھی المیہ اچھا نہیں لگتا

Verses

محبت میں کوئی بھی المیہ اچھا نہیں لگتا
وفا کے باب میں بھی تجزیہ اچھا نہیں لگتا

ہمیں اچھا تو لگتا ہے جِگر کے درد کو چُھونا
مگر یہ درد جس نے بھی دیا،اچھا نہیں لگتا

تمہیں ضِد ہے بجھانے کی،جلانا خُو ہماری ہے
ہمیں بھی طاق پر بجھتا دیا اچھا نہیں لگتا

نئے رستے بنا کر ان پہ چلنا اپنی فطرت ہے
کسی نے جب انہیں اپنا لیا، اچھا نہیں لگتا

بلا سے شہر سارا مے کو، مے خانوں کو پی جائے
مگر یہ زہر اس نے بھی پیا، اچھا نہیں لگتا

ہمارے سر پہ رکھ کر ہاتھ اس نے جو قسم کھائی
پھر اس کو توڑ کر بھی وہ جیا، اچھا نہیں لگتا

حسن و جمال کے بھی زمانے نہیں رہے

Verses

حسن و جمال کے بھی زمانے نہیں رہے
آنکھوں میں اس کی خواب سہانے نہیں رہے

ملنے کو آہی جاتا ہے ہر چند روز بعد
لگتا ہے اس کے پاس بہانے نہیں رہے

لرزش ہے ہاتھ میں تو نظر بھی ہے دُھندلی
پہلے سے اب وہ دل کے نشانے نہیں رہے

اُٹھتی نہیں ہیں شوق و تجسّس کے باوجود
آنکھوں کے کتنے کام پرانے نہیں رہے

کمرے سب بھر گئے ہیں مسائل کی گرد سے
دل میں تیرے خیال کے خانے نہیں رہے

Raat Ankhon Main Dhali

raat aankhon main dhali palkon pe jugnu aaye
raat aankhon main dhali palkon pe jugnu aaye
hum hawao ki tarah jaake use chu aaye
raat aankhon main dhali palkon pe jugnu aaye

bas gayi hain mere ehsaas main yeh kaisi mehak
bas gayi hain mere ehsaas main yeh kaisi mehak
koi khusbu main lagau teri khusbu aaye
hum hawao ki tarah jaake use chu aaye
raat aankhon main dhali palkon pe jugnu aaye

میں آسماں کی شاخ پہ زندہ ہوں دوستو

Verses

میں آسماں کی شاخ پہ زندہ ہوں دوستو
چمکار کر بلاؤ، پرندہ ہوں دوستو

اب کے فساد نے مجھے یہ بھی بتا دیا
میں آدمی نہیں ہوں، درندہ ہوں دوستو

تم جن کے نیچے بیٹھ کے اوتار ہو گئے
ان برگدوں کا میں بھی پرندہ ہوں دوستو

اخبار میں خبر مر ے مرنے کی چھپ گئی
میں چیختا رہا کہ میں زندہ ہوں دوستو

سچ یہ ہے میری بابری مسجد مُجھی میں ہے
اور میں خُدا کے فضل سے زندہ ہوں دوستو

Tumehn Dil Diya

tumhen dil diya
ye kya kiya main ne -2
duniya ka dard le liya main ne
tumhen dil diya
ye kya kiya main ne
duniya ka dard le liya main ne

kya bhale din the vo -2
nazaron mein tum samaaye na the
kabhi bhari thandi saans nahi thi
aur aankhon mein aansu aaye na the
ab roti hoon main -2
kya kiya haay! kya kiya main ne

tumhen dil diya ...

میرا غرور، تجھے کھو کے، ہار مان گیا

Verses

میرا غرور، تجھے کھو کے، ہار مان گیا
مَیں چوٹ کھا کے مگر اپنی قدر جان گیا

کہیں افق نہ ملا میری دشت گردی کو
مَیں تیری دھن میں بھری کائنات چھان گیا

خدا کے بعد تو بے انتہا اندھیرا ہے
تیری طلب میں کہاں تک نہ میرا دھیان گیا

جبیں پہ بل بھی نہ آیا گنوا کے دونوں جہاں
جو توُ چِھنا، تو مَیں اپنی شکست مان گیا

بدلتے رنگ تھے تیری امنگ کے غماّز
توُ مجھ سے بچھڑا، تو مَیں تیرا راز جان گیا

خوُد اپنے آپ سے مَیں شکوہ سنج آج بھی ہوُں
ندیم، یوُں تو مجھے اِک جہان مان گیا

Pyaar Kab Karoge

pyaar kab karoge - 4
o saara din tum kaam karoge

mausam hai divaanon ka mat lo naam bahaaron ka
kab tak karate rahoge kun mere aramaanon ka
kab tak nind
pyaar kab karoge

pyaar ka naam likho upar baaqi saare naamon se
na jaane kab milegi fursat tumako apane kaamon se
raat ko tum aaraam karoge
pyaar kab karoge

دوست بن کر بھی نھیں ساتھ نبھانے والا

Verses

دوست بن کر بھی نھیں ساتھ نبھانے والا
وھی انداز ھے ظالم کا زمانے والا

اب اسے لوگ سمجھتے ھیں گرفتار میرا
سخت نادم ھے مجھے دام میں لانے والا

کیا کہیں کتنے مراسم تھے ھمارے اس سے
وہ جو اک شخص ھے منہ پھیر کے جانے والا

تیرے ھوتے ھوئے آ جاتی تھی ساری دنیا
آج تنھا ھوں تو کوئی نھیں آنے والا

منتظر کس کا ھوں ٹوٹی ھوئی دھلیز پہ میں
کون آئے گا یہاں کون ھے آنے والا

میں نے دیکھا ھے بہاروں میں چمن کو جلتے
ھے کوئی خواب کی تعبیر بتا نے والا

کیا خبر تھی جو میری جان میں گھلا ھے اتنا
ھے وھی مجھ کو سر -دار لانے والا

تم تکلف کو بھی اخلاص سمجھتے ھو فراز
دوست ھوتا نھیں ھر ھاتھ ملانے والا

O Tushima O Tushima

o tushima ri tushima -2
aaj jaane kis kaaran haule-haule dole man
a gaya toofaan, haan, a gaya toofaan -2
o tushima ri tushima -2

chhaai masti bastee-basti parvat-parvat jhoomen-2
yoon chali puravaayee, ang-ang leve angadaai
dharati chhoove aasamaan, a gaya toofaan
a gaya toofaan, haan, a gaya toofaan
o tushima ri tushima ...