فصیح الملک داغ (شاعر) کے حضور میں

Verses

فصیح الملک داغ (شاعر) کے حضور میں

سخن وروں کی ولایت کا تاجدار ہے تو
خدا گواہ کہ یکتائے روزگار ہے تو

زبان کو ناز ہے تجھ پر کہ تیرے گھر کی ہے
وطن کو فخر ہے تجھ پر کہ سحرکار ہے تو

فلک پہ چاند ہے تیری بلندیوں کا گواہ
بہار حسن کی تابندہ یادگار ہے تو

یہی مقام ہے جسے تو نے زمینیں بخشیں
اسی لٹے ہوئے گلزار کی بہار ہے تو

جناب سائل و بیخود پہ اٹھ رہی ہے نگاہ
نہاں ہے پھر بھی سر بزم آشکار ہے تو

ابھی نگاہ میں میں ہے شکل حضرت سیماب ؔ
ابھی تو شاخ نشیمن پہ نغمہ بار ہے تو

ابھی تو پیش نظر ہے شبیہہ دلبرؔ و نوح
ابھی ہماری محافل میں گرم کار ہے تو

ابھی بہت ہیں وہ ارباب محترم جن کے
لطیف و شستہ تکلم سے آشکار ہے تو

مگر کچھ آج یہ محسوس ہو رہا ہے مجھے
کہ جیسے گوشہ تربت میں بیقرار ہے تو

میں جاتنا ہوں تیری بیقراریوں کا سبب
نئے ادب کے تخیل سے اشکبار ہے تو

نہ وزن شعر نہ مطلب نہ قافیہ نہ ردیف
اسی خیال سے محزوں تہہ مزار ہے تو

اگر یہ سچ ہے تو تجھ کو یقین دلاتے ہیں
ہمارے دیدہ وہ دل کا فقط قرار ہے تو

یہ داغ داغ کی خاطر مٹا کے چھوڑیں گے
نئے ادب کو فسانہ بنا کے چھوڑیں گے

حبس دنیا سے گزر جاتے ھیں

Verses

حبس دنیا سے گزر جاتے ھیں
ایسا کرتے ھیں کہ مر جاتے ھیں

کیسے ھوتے ھیں بچھڑنے والے
ھم یہ سوچیں بھی تو ڈر جاتے ھیں

دل جو ٹوٹے تو سر محفل بھی
بال بے وجہ بکھر جاتے ھیں

اب نہ دیکھو میری بنجر آنکھیں
چڑھتے دریا تو اتر جاتے ھیں

دھوپ کا روپ رچانے والے
شام کو اور نکھر جاتے ھیں

اب نہ مڑ مڑ کے پکارو ان کو
لوگ رستے میں ٹھہر جاتے ھیں

خالی دامن سے شکایت کیسی
اشک آنکھوں میں تو بھر جاتے ھیں

تم کہاں جاؤ گے سوچو"محسن"
لوگ تھک ھار کے گھر جاتے ھیں

Pyar diwana hota hai

pyaar diwaanaa hotaa hai, mastaanaa hotaa hain
har khushee se, har gam se, begaanaa hotaa hain

shamaa kahe parawaane se, pare chalaa jaa
meree tarah jal jaayegaa, yahaa naheen aa
wo naheen sunataa, us ko jal jaanaa hotaa hain

rahe koee sau paradon me, dare sharam se
najar ajee laakh churaye, koee sanam se
aa hee jaataa hain jis pe, dil aanaa hotaa hain

suno kisee shaayar ne ye, kahaa bahot khub
manaa kare duniyaan lekin mere mehaboob
wo chhalak jaataa hai, jo paimaanaa hotaa hain

ان کی نگہِ قہر سے مایوس نہ ہو دل

Verses

ان کی نگہِ قہر سے مایوس نہ ہو دل
اک دن یہ محبت کی نظر ہو کے رہے گی

تم راز محبت کو چھپاتے تو ہو مجھ سے
واللہ کہ دنیا کو خبر ہو کے رہے گی

پوچھوں میں نہ کیوں ان کا پتہ اپنی نظر سے
جس سمت وہ ہوں گے یہ اُدھر ہو کے رہے گی

یہ ڈوبتے تارے یہ فسردہ سا رُخِ ماہ
آثار بتاتے ہیں صبح ہو کے رہے گی

Teri Meri Ek Jind

now, all good looking boys and sweet looking girls,
want to know who love you more than diamonds,
love you more than pearls, so here it is come on

teri meri ik jind
toone akkh naal akkh milaai o mach gai duhaai
teri meri ik jind ik jind
main tera makhana a ha
main tera makhana tu makhani malaai o mach gai duhaai
teri meri ik jind ik jind ...

tell me what you are thinking
tell me all your feeling
ho maine akkh naal akkh milaai o mach gayi duhaai
teri meri ik jind ik jind ...

Theme by Danetsoft and Danang Probo Sayekti inspired by Maksimer