بتاؤ اب کیوں اسے منانے کی آرزو ھے

IN Khan's picture

بتاؤ اب کیوں اسے منانے کی آرزو ھے
کہا کہ اپنی انا مٹانے کی آرزو ھے

بتاؤ کیوں آ گئے ہو سب کچھ نثار کر کے
کہا کہ جو کہہ دیا نبھانے کی آرزو ھے

کہو پرانے دیار میں آ گئے ھو کیسے
کہا کہ گزرے ھوئے زمانے کی آرزو ھے

سنو جو چاہو تو پیاس دیدار کی بجھا دوں
کہا یہی پیاس تو بڑھانے کی آرزو ھے

بتاؤ کیوں دشمنوں کو آواز تم نے دے دی
کہا کہ یاروں کو آزمانے کی آرزو ھے

کہو کہ بھیگی نظر سے کیوں آسماں کو دیکھا
کہا ستارے نئے بنانے کی آرزو ھے

سنو کہ آنے کا کہہ دیا ہے بالآخر اس نے
کہا کہ اب تو اسے بھلانے کی آرزو ھے

بتاؤ کیا چاھتے ہو کوئی عدیم خدمت
کہا کہ اپنا تمہین بنانے کی آرزو ھے

کہو اسے کیوں عدیم ناراض کر لیا ھے
کہا کہ پھر سے اسے منانے کی آرزو ھے

No votes yet