زندگی صرف اسی دھن میں گزارے جائیں

Verses

زندگی صرف اسی دھن میں گزارے جائیں
بس تیرا نام، ترا نام پکارے جائیں

جب یہ طے ہے کہ یہاں کوئی نہیں آئے گا
کس کی خاطر در و دیوار سنوارے جائیں

ایک تجھ تک نہ پہنچ پائے مرے درد کی آنچ

Author